یوں دیکھتے رہنا اسے اچھا نہیں محسنؔ.

یوں دیکھتے رہنا اسے اچھا نہیں محسنؔ

وہ کانچ کا پیکر ہے تو پتھر تری آنکھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں