حجر کا تارا ڈوب چالا ہے ڈھلنے لگی ہے رات وصی

حجر کا تارا ڈوب چالا ہے ڈھلنے لگی ہے رات وصی

قطرہ قطرہ برس رہی ہے اشکوں کی برسات وصی

اپنا تبصرہ بھیجیں