شوقِ وفا نہ سہی

شوقِ وفا نہ سہی

خوفِ خدا تو رکھ

اپنا تبصرہ بھیجیں